Hk Bashir Institute Of Herbal Sciences

Hk Bashir Institute Of Herbal Sciences Join us to discover the best ways to lose fat, maintain a healthy weight and stay healthy for life!

                قدرتی طریقہ علاج،بہتر طریقہ علاج
26/03/2024









قدرتی طریقہ علاج،بہتر طریقہ علاج

24/03/2024











23/03/2024

ڈاکٹر بشریٰ مرزا کو بہت بہت مبارک ہو
ڈاکٹر صاحبہ کا میڈیسنل پلانٹس پر جتنا کام ہے وہ اس صدارتی ایوارڈ کی عین حق دار ہیں




A team of surgeons have successfully transplanted a genetically modified pig kidney into a living patient for the first ...
23/03/2024

A team of surgeons have successfully transplanted a genetically modified pig kidney into a living patient for the first time, a US hospital said on Thursday.

The four-hour operation was carried out on Saturday on a 62-year-old man suffering from end-stage kidney disease, Massachusetts General Hospital (MGH) said.

“The procedure marks a major milestone in the quest to provide more readily available organs to patients,” the hospital said in a statement.

Organ shortages are a chronic problem around the world and the Boston hospital said there are more than 1,400 patients on the waiting list for a kidney transplant at MGH alone.

Read more: https://www.dawn.com/news/1823025





A team of surgeons have successfully transplanted a genetically modified pig kidney into a living patient for the first time, a US hospital said on Thursday.

The four-hour operation was carried out on Saturday on a 62-year-old man suffering from end-stage kidney disease, Massachusetts General Hospital (MGH) said.

“The procedure marks a major milestone in the quest to provide more readily available organs to patients,” the hospital said in a statement.

Organ shortages are a chronic problem around the world and the Boston hospital said there are more than 1,400 patients on the waiting list for a kidney transplant at MGH alone.

Read more: https://www.dawn.com/news/1823025

22/03/2024




             #رمضان2024
21/03/2024







#رمضان2024

        The Pharmacy 🥦🥬
20/03/2024





The Pharmacy 🥦🥬

  #رمضان2024
17/03/2024


#رمضان2024



پٹرولیم جیلی:لفظ Vaseline دراصل(دو لفظوں سے مل کر بنا ہےWasser مطلب پانی جرمنی زبان اور Elaion مطلب زیتون کا تیل یونانی ...
15/03/2024

پٹرولیم جیلی:
لفظ Vaseline دراصل
(دو لفظوں سے مل کر بنا ہےWasser مطلب پانی جرمنی زبان اور Elaion مطلب زیتون کا تیل یونانی زبان)

لیکن اصل میں یہ پیٹرولیم جیلی ہے مطلب کہ تیل کی جیلی

1859 میں امریکہ میں تیل کے کنویں پر کام کرنے والے مزدوروں نے نوٹ کیا کہ تیل کی پیداوار کے دوران ایک موم جیسا مادہ بھی پیدا ہوتا ہے جسے انہوں نے وہاں ہاتھوں پر ہلکے پھلکے زخموں کو چھپانے کے لئیے استعمال کیا اور وہ زخم ٹھیک ہونے لگے
انہوں نے اس موم کو Rod Wax کا نام دیا
لیکن ایک نوجوان ماہر کیمسٹ Robert Chesebrough نے اس Rod wax پر تجربات کرکے اسے صاف کیا اور جیلی نما مادہ بنالیا جسے پیٹرولئیم جیلی کہتے ہیں

اس نے اسے کمرشلی بیچنے کے لئیے لفظ Vaseline کو رجسٹر کرایا جو کہ اب Unilever کمپنی کے زیر تحت ہے
یاد رہے Vaseline کمپنی کا نام ہے جبکہ اصل شے کا نام پیٹرولئیم جیلی ہے

پیڑولیم جیلی جسم پر آنے والے چھوٹے موٹے خراش، زخم، خارش، پٹھے ہونٹ، انگلیاں، کسی جسمانی مسلسل پریکٹس کے دوران ہونے والے چھالے یا سرخ جلد کو ٹھیک کرنے میں بہت موثر ہے۔ دراصل یہ جلد پر ایک غلاف کی طرح کام کرتی ہے تاکہ اس جگہ سے نمی غائب نہ ہو پائے جبکہ باہر سے بھی کوئی دوسری شے اندر جلد کے داخل نہ ہوسکے۔ زخم کے اردگرد مناسب نمی اسکے جلد ٹھیک ہونے کا ماحول پیدا کرتی ہے اور ساتھ ہی ساتھ Scap (پنجابی میں کھرنڈ) جو زخم پر بن جاتے ہیں انہیں نرم رکھتی ہے جلدی خشک نہیں ہونے دیتی جس کے باعث زخم بھرنے کا عمل تیز ہوتا ہے

ہمارے ہونٹوں میں پسینے کے گلینڈز نہیں ہوتے اور اسکن بھی پتلی ہوتی ہے۔ اسلئیے بہت جلد نمی کھونے کے باعث خشک ہونے پھٹنے لگتے ہیں لیکن پٹرولیم جیلی یا ویسلین لگانے سے نمی اندر قید ہونے کے باعث ان میں دوبارہ تازگی آنے لگتی ہے

نہانے کے بعد چہرہ خشک کرکے ہلکی سی ویسلین لگانے سے چہرہ نور جیسا چمکنے لگتا ہے اور باقاعدہ اس عمل کو عادت بنانے سے چمکتا دمکتا رہتا ہے۔ ویسلین پتلی بھنووں پر لگانے سے بھی وہ زرا موٹی لگنے لگتی ہیں اور آنکھوں کے حلقے ہلکے کرنے میں بھی مددگار ہے

ویسلین سے چمڑے کے جوتے بھی چمکنے لگتے ہیں اور کچھ لوگ بالوں میں چمک لانے کے لئیے بھی استعمال کرتے ہیں۔ جوتوں پر لگا کر انہیں کسی کپڑے سے رگڑ کر صاف کرنے سے یہ جوتوں میں چمک لے آتی ہے اور ساتھ ہی ساتھ جوتے کی خراشوں کو بھی چھپا دیتی ہے

اپنے جسم پر باڈی سپرے کی خوشبو زیادہ دیر رکھنے کے لئیے اگر اس جگہ ویسلین لگا کر اوپر سپرے مارا جائے تو ایسا ممکن ہے

ویسلین یا پٹرولیم جیلی کو میک اپ مٹانے کے لئیے بھی استعمال کیا جاتا ہے اور بال رنگنے کے بعد جلد پر رنگ کے داغوں کو مٹانے کے لئیے بھی۔
ویسلین ایک بہترین Lubricant ہے۔ اگر دروازہ آواز دیتا ہو تو اس کے Door hinge قبضے پر لگانے سے آواز آنا کم ہوجائے گی۔ انتہائی سرد علاقوں میں ویسلین کا تالوں میں استعمال انہیں چابی سے کھلنے کے قابل بنائے رکھتا ہے۔ جیکٹ یا پینٹ کی زپ ٹھیک طرح نہ چل رہی ہو تو ویسلین لگانے سے دوڑنے لگ جاتی ہے۔
البتہ دوران ہمبستری ویسلین کا استعمال درست نہیں۔ کیونکہ یہ خود سے ختم انتہائی سست رفتاری سے ہوتی ہے جو کہ عورت کی اندرونی جلد میں مسائل پیدا کرسکتی ہے
اسی طرح ویسلین کا جلد پر خصوصاً چہرے پر بہت زیادہ استعمال جلد کے سوراخ بند کرکے سیاہ دھبے اور Acne پیدا کرنے کا باعث بن سکتا ہے
ویسلین کو منہ کے اندرونی چھالوں کے لئیے ہلکا سا استعمال کیا جاسکتا ہے لیکن اگر معدے میں اچھی مقدار میں چلی جائے تو ناقابل ہضم ہوگی جو الٹی کی صورت میں باہر نکلنے کی کوشش کرے گی
سردیوں میں ناک کے اندرونی ہلکے زخموں جو الجھن پیدا کرتے رہتے ہیں پر لگانے سے آرام ملتا ہے
ویسلین بہت سے رینگنے والے کیڑوں خصوصاً جرمن کاکروچ کو برتن میں ٹریپ کرنے کے کام بھی آتی ہے جس میں برتن کی دیواروں پر ویسلین مل دینے سے کیڑے اندر خوراک کھانے کے بہانے پھنس جاتے ہیں
ویسلین عام درجہ حرارت پر خراب نہیں ہوتی اور لمبا عرصہ قابل استعمال رہتی ہے
بہت ساری ایسی چیزیں جنہیں پانی سے بچانا ہو مثلا چمڑہ، دھاتی شے
ان پر ویسلین لگانے سے ایسا ممکن ہے
کئی لوگوں کی سکن بہت حساس ہوتی ہے جنہیں ویسلین مسئلہ کرسکتی ہے
کاپی











           #روزہ
14/03/2024






#روزہ

(روزہ کا روحانی اور طبی پہلو)

ماہ رمضان المبارک کے روزے ہر مسلمان پر فرض ہیں. قرآن حکیم میں ارشاد باری تعالی ہے اے ایمان والو! روزہ تم پر فرض کیا گیاجیسا کہ تم سے پہلے لوگوں پر فرض کیا گیاتاکہ تم میں تقوی پیدا ہو
روزے کی فضیلت کا اندازہ اس بات سے ہوتا ہے کہ یہ دین اسلام کے بنیادی ارکان میں سے ہیں..

(طبی پہلو)

دین اسلام دین فطرت ہے اس طرح روزوں کا دینی اور روحانی پہلو اپنی جگہ اگر چہ روزہ کا بنیادی مقصد تقوی پیدا کرنا ہے مگر اس کے طبی پہلو کی بھی اپنی اہمیت ہے کیونکہ دین فطرت ہونے کے ناطے اس کا ہر عمل انسان کے لیے ہر طرح مفید ہے. روزہ ہر مسلمان پر فرض ہے البتہ اگر کوئی بیمار ہو یا سفر میں ہو یا خواتین کے مخصوص مسائل ہوں تو ایسی صورت میں رخصت کی اجازت ہے اور بعد میں رکھ لے معافی کسی صورت نہیں ہے

(روزہ فاقہ نہیں)
بعض لوگ روزہ کو فاقہ قرار دیتے ہیں جس سے صحت متاثر ہوتی ہے حالانکہ روزہ فاقہ نہیں ہے بلکہ صبح نماز فجر سے غروب افتاب تک کھانے پینے اور نفسیاتی خواہشات سے دور رہنے کا نام ہے اس طرح روزہ سے نظم وضبط کے ساتھ زندگی گزارنے کی تربیت کے ساتھ ساتھ قوت ارادی بڑھتی ہے- قوت برداشت میں اضافہ ہوتا ہے.جسم کو فاسد مواد سے پاک اور خون صاف کرتا ہے -ہوس اور حرص سے مقابلہ کی قوت پیدا کرتا ہے اس طرح جسم کی تربیت ہوتی ہے ایک جائز اور حلال چیز سامنے پڑی ہے مگر روزہ میں نہیں کھانی اس طرح قوت ارادی بڑھتی ہے
جس کے صحت پر اچھے اور مفید اثرات ہوتے ہیں اور مدافعتی نظام مضبوط ہوتا ہے. روزہ سے کئی امراض میں فائدہ ہوتا ہے جن میں ہائی بلڈ پریشر ،موٹاپا، نزلہ زکام اور امراض معدہ شامل ہیں.-ہم کہہ سکتے ہیں کہ روزہ کئی امراض کا قدرتی یکسر علاج بھی ہےاب تو مغرب والے بھی فاقہ کے نام پر روزے کی طبی افادیت کے قائل ہو چکے ہیں کئ امراض میں فاقہ سے علاج کرتے ہیں روزہ معدہ کی اصلاح کرتا ہے اور نظام ہضم کو درست کرتا ہے میڈیکل سائنس کے مطابق بہت سے امراض کی وجہ معدہ کے نظام کی خرابی ہے جب کہ روزہ سے معدہ چاک وچوبند ہو کر جسم کی خدمت کے لیے مستعد ہو جاتا ہے
صبح سے شام تک کوئی چیز نہ کھانے پینے سے معدہ اور اس کے متعلقہ اعضاء کو آرام کا موقع مل جاتا ہے اور جو قوت غذا کو ہضم کرنے میں صرف ہوتی ہےروزہ کی صورت یہ قوت جسم کے ردی و فاسد مواد اور لحمیات کو خارج کرتی ہے یہ مواد امراض کا سبب بنتا ہے یوں روزہ کی وجہ سے اخراج ہو کر جسم کے اعضاء کی کارکردگی بڑھ جاتی ہے جس سے صحت بہتر ہوتی ہے
تمباکو نوشی کی وجہ سے دنیا بھر میں ہر سال ساٹھ لاکھ افراد موت کی وادی میں چلے جاتے ہیں- عالمی ادارہ صحت کا کہنا ہے کہ اگر تمباکو نوشی کے اس سیلاب کو روکا نہ گیا تو 2030 میں یہ تعداد مذید بڑھ جائے گی پاکستان ان ممالک میں ہیں جہاں تمباکو نوش حضرات کی شرح 21 فیصد ہے اور ہر سال 5 فیصد اضافہ ہو رہا ہے تمباکو نوشی میں سب سے خطرناک نیکوٹین ہے جو دمہ، کھانسی، منہ ،حلق، پھپٹروں اور آنتوں کے کنسر کا سبب بن سکتی ہے شعور آگاہی کے باوجود تمباکو نوشی کو بڑھنے سے روکا نہیں جا سکا مگر روزہ جو قوت ارادی بڑھاتا ہے سارا دن بغیر کھائے پیے اور تمباکو نوشی کے گزر جاتا ہے

افطاری کے بعد اس علت میں مبتلا افراد کو شدید طلب ہوتی ہے اس کی جگہ اگر چاے یا قہوہ استعمال کریں یا پھر افطاری کے بعد تسبیح یا تلاوت قرآن حکیم کریں یا کوئی مصروفیات کرلیں تو چند روز بعد یہ عادت ختم ہو جاے گی جس کا فائدہ آپ کی صحت اور خاندان کو ہو گا روزہ کے جسم پر جو مثبت اثرات ہوتے ہیں اس میں سب سے قابل ذکر خون کے روغنی مادوں میں ہونے والی تبدیلیاں ہیں خاص کر مفید قلب کولیسٹرول( ایچ ڈی ایل) کی سطح میں مفید اضافہ ہے کیونکہ اس سے دل کی شریانوں کو تحفظ ملتا ہے اس کے علاوہ مضر قلب چکنائی( ایل ڈی ایل) اور ٹرائی گلیسرائیڈ کی سطح بھی معمول پر آ جاتی ہے اس کے علاوہ روزوں کی وجہ سے چکنائیوں کے استحالے(میٹابولزم) کی شرح بہت اچھی ہو جاتی ہے جس کے صحت قلب پر اچھے اثرات ہوتے ہیں اس کے علاوہ خون کا بڑا ہوا دباؤ ( ہائی بلڈ پریشیر) بھی نارمل ہو جاتا ہے-شریانوں کی کمزوری اور فرسودگی جو کہ آجکل عام ہے کی بڑی وجہ خون میں شامل باقی ماندہ غذائی مادوں کا پوری طرح تحلیل نہ ہونا ہے یوں شریانوں کی دیواروں پر چربی یا اس کے اجزاءجم جاتے ہیں جس کے نتیجے میں شریانیں سیکٹرنے کا عمل ہو سکتا ہے- روزہ میں جب خون میں غذائی مادے کم ترین سطح پر ہوں گے تو شریانوں کے سیکھنے کے مرض سے بچا جا سکتا ہے اور ہڈیوں کا گودہ حرکت پزیر ہو کر خون میں اضافہ کا سبب بنے گا اس طرح جسم میں خون کی کمی کا عارضہ نہیں ہو گا. موٹاپا صحت کے لیے اہم مسئلہ ہے خواتین میں تو موٹاپا ختم کرنے کا جنون ہے- جگہ جگہ سلمنگ سنٹر قائم ہیں موٹاپا کو روکنے کے لئے طرز زندگی اور غذائی عادات کو بدلنا لازمی ہے اگر روزہ کو روزہ کی روح یعنی تقلیل غذا کے مطابق رکھا جائے تو موٹاپا سے بچا جاسکتا ہے ہم لوگ روزہ کے جسمانی صحت پر اثرات اس لیے حاصل نہیں کر پاتے کہ ہم روزہ رسول اکرم صہ کے اسوہ کے مطابق نہیں رکھتے
🥙🥘🍜🍲🥗🫕🍝🥞🍳🍰
سحری وافطاری میں انواع واقسام کے کھانے تیار کرتے ہیں. گھروں کا بجٹ بڑھ کر دو گنا ہو جاتا ہے. یوں روزہ کی روح ختم ہو جاتی ہے اور جسم کی صحت کو مطلوبہ اثرات نہیں ملتے. اکثر دیکھا گیا ہے کہ ہمارے اس قدر افطاری کی جاتی ہے کہ اس کے بعد کھانے کی گنجائش ختم ہو جاتی ہے اور چٹ پٹی اشیا کے بعد خوب پانی اور مشروبات سے پیٹ بھر لیا جاتا ہے جس سے نماز عشاء میں طبعیت بوجھل ہونے لگتی ہے اور اس طرح پیٹ بھرنے سے چند روز بعد بھوک متاثر ہو جاتی ہے اور جسم میں نقاہت کا احساس ہوتا ہے جب ہم روزے میں دن میں کئ بار کھانے کے صرف صبح وشام کم غذا لیں گے تو جسم میں چربی کم ہوتی جاے گی جس سے موٹاپا جاتا رہے گااگر ہم روزہ کے جسمانی صحت پر خوشگوار اثرات چاہتے ہیں تو سب سے بہتر افطاری کھجور اور دودھ ہے دودھ میں کوئ دیسی مشروب لیا جاسکتا ہے گرمی کا موسم ہے تو ستو شکر ملا کر یا لیموں کی سنکجین لی جا سکتی ہے- کھجور سنت رسول بھی ہے یہ معدہ میں جاتے ہی خون میں حل پزیر ہو کر دن بھر کی کمزوری ختم کر دیتی ہے پھر نماز مغرب کے بعد معمول کا کھانا کھائیں
🍪🥟🍥🍘🍪🥟🍥🍪🥟🥠
پکوڑے سموسے کچوریاں اور چاول رمضان المبارک میں ترک کر دیں اس طرح سحری میں روٹی سالن کے ساتھ دہی یا کچی لسی مفید ہے- روزہ پر جدید میڈیکل سائنس میں جس قدر تحقیق ہوئی ہے سب نے روزہ کو صحت کے لیے مفید قرار دیا ہے. 1996 میں جنوبی افریقہ میں روزہ کے صحت پر اثرات کے عنوان سے کانفرنس ہوئی جس میں 50 سے زائد ممالک کے ماہرین طب و صحت شریک ہوئے سب نے اتفاق کیا کہ جو لوگ رسول اکرم صہ کے طریقے کے مطابق روزے رکھتے ہیں ان کے جسم میں غیر معمولی تبدلیاں ہوتی ہیں. نشہ اور غیر ضروری عادات سے جان چھوٹ جاتی ہے کانفرنس میں شریک ماہرین وہ مسلم تھے یا غیر مسلم سب کا کہنا تھا کہ روزہ سے جسم پر کوئی مضر پہلو نہیں ہوتا اور ہر طرح سے جسم کے لیے فائدہ مند ہے. جدید تحقیقات نے بھی روزہ کے جسم پر خوشگوار اثرات کو تسلیم کیا ہے
رمضان المبارک کے ماہ کو ہم ماہ تربیت بھی کہہ سکتے ہیں اس میں پابندی اوقات سے کھانا پینا ہوتا ہے
جس سے جسم کی قوت مدافعت(ایمون سسٹم) جو قدرت نے بغیر کسی خارجی تدبیر کے امراض سے بچا کے لئے بنا رکھا ہے اور جسم کے اعضاء کی کارکردگی کو قائم رکھتا ہے روزہ اس قوت کو مضبوط بناتا ہے
📝📖📝📖📝📖📝📖📝📖
میڈیکل سائنس کے مطابق امراض اس وقت حملہ آور ہونے میں کامیاب ہوتے ہیں
جب یہ قوت کمزور پڑتی ہے اس لئے علاج میں مرض کی دوا کے ساتھ اس قوت کو مضبوط بنایا جاتا ہے

وہ ویدک طریقہ علاج میں بھی اور جدید میڈیکل سائنس نے بھی وقتی طور پر ترک خوردونوش کو ازالہ امراض کے لئے اہم تدبیر قرار دیتے ہیں
🫄🫄🫄🫄🫄🫄🫄🫄
ہمارے ہاں اکثر لوگ اس لئے روزہ کے صحت اثرات حاصل نہیں کر پاتے کہ رمضان المبارک میں تقلید غذا کی بجاے بسیار خوری کرتے ہیں اور مرغن غذاؤں کا استعمال میں اضافہ کردیتے ہیں اور اس طرح گھروں کا بجٹ بھی بڑھا لیتے ہیں جس سے ہم دینی اور صحت دونوں طرح مقاصد حاصل نہیں کر پاتے کیوں کہ زائد از ضرورت غذا کو جسم سے خارج کرنے کے لئے جسمانی اعضا کو زیادہ کام کرنا پڑتا ہے اور ان کی کارکردگی میں فرق آتا ہے جس سے صحت کے مسائل جنم لیتے ہیں البتہ ذیابیطس گردوں کے مریضوں اور دل کے مریضوں کو اپنے معالج کے مشورے سے روزہ رکھنا چاہیے

رمضان المبارک کے لئے بہترین غذائیں

کھجور: 🌴🌴🌴🌴🌴🌴🌴
یہ محبوب خدا کی سنت ہے اور حیاتین سے بھر پور ہے اور جلد جزوبدن بن جاتا ہے دن بھر جو حرارے تحلیل ہوتے ہیں ان کا نعم البدل ہے
شہد:🍯🍯🍯🍯🍯🍯🍯🍯
جدید تحقیقات کے مطابق یہ صحت وتوانائی بہت عمدہ ہے یہ بچہ سے بوڑھے تک سب کے لئے با کمال ہے اس کا روزانہ دو چمچ استعمال افطار کے ساتھ کرلیا جائے
🍚🥣🥡🍚🥡🥣🍚🥡🥣🍚
(دہی )چھاج دودھ اور زیتون بھی روزوں میں استعمال کریں دودھ کی طرح دہی بھی جسم کی نشوونما کے لئے عمدہ غذا ہے چھاج جب ہضم ہوتی ہے تو اس کی حرارت جسم کی قدرتی حرارت سے مل کر جسم کی نشوونما کرتی ہے جسم کے تمام اعضا اور پرزے دودھ دہی سے نشوونما پاتے ہیں اور روزوں کے صحتی فوائد بھی حاصل کریں-

اگر چہ یہ مقصد نہیں ہے بلکہ مقصد کے حاصل کرنے کا ذریعہ ہے اصل مقصد تقوی بے اس طرح ہم دینی مقصد کے ساتھ صحتی فوائد بھی حاصل کرسکتے ہیں اور نہ صرف روزہ کو اس کی روح کے مطابق رکھ کر جسم کو صحت مند رکھ سکتے ہیں بلکہ روحانی طور پررفعت و عظمت کا حصول بھی کرسکتے ہیں اور اللہ کی رحمت سے استفادہ کر سکتے ہیں
بشکریہ
حکیم حارث نسیم سوہدروی [email protected]

پانی زندگی کے لیے ضروری اس نعمت کی حفاظت کریں
10/03/2024

پانی زندگی کے لیے ضروری اس نعمت کی حفاظت کریں




پانی زندگی کے لیے ضروری اس نعمت کی حفاظت کریں



سنگرہنی کی علامات/پرہیز کیا ہیں؟😣🫄😣🫄😣🫄😣🫄😣🫄آج کے دور میں یہ بھی پیٹ کا  ایک عام مسلئہ بن چکا ہےآئی بی ایس یعنی (Irritable...
09/03/2024

سنگرہنی کی علامات/
پرہیز کیا ہیں؟
😣🫄😣🫄😣🫄😣🫄😣🫄
آج کے دور میں یہ بھی پیٹ کا ایک عام مسلئہ بن چکا ہے
آئی بی ایس یعنی
(Irritable Bowel Syndrome)
ایک دائمی، غیر سوزش اور تکلیف دہ بیماری ہے
اسباب📌
جو کسی وجہ سے جیساکہ غیر متوازن غذا،ڈیپریشن، سٹرس، تنائو، انزائٹی، غلط عادات، نیند کی کمی، اور پیٹ کے انفیکشنز وغیرہ سے ہو سکتی ہے۔ پاکستان میں لاکھوں افراد IBS کے مرض میں مبتلا ہیں
آئی بی ایس کو لوگ سنگرہنی ، گیس یا آپھارا کا مسلئہ بھی کہتے ہیں
📍📍📍📍📍📍📍📍📍📍
باقی آی بی ایس کی علامتیں ہر مریض میں کچھ مختلف ہو سکتی ہیں ۔مریض میں آی بی ایس کی علامتیں آتی ہیں پھر چلی جاتی ہیں،کبھی قبض توکبھی لوز موشن،تو کبھی مریض نارمل محسوس کرتا ہے۔ کبھی آی بی ایس کی علامتیں کچھ دن رہتی ہیں تو کبھی مہینوں سالوں چلتی ہیں
🔎🔍🔎🔍🔎🔍🔎🔍🔎🔍
علامات
1:کھانے کے بعد فوری پاخانہ انا
2: پیٹ میں درد ، مروڑ کا ہونا کبھی کچھ دن کے لیے
توکبھی مہینوں تک ،
3:تیزابیت، جلن کا ھونا اور اس کی وجہ سے منہ میں چھالےبھی پڑ جاتے ہیں،
4:معدے میں درد ھونا
5:اپھارہ۔یا پیٹ میں گیس بھرنا
6:متلی ھونا
7:معدے سکڑتا ھوا محسوس ھونا
8:الٹی یا قے انا ،بد ہضمی کا ہونا
9؛دائمی قبض کی صورت میں بواسیر بھی ہو سکتی ہے۔
10: کبھی قبض ھونا تو کبھی موشن ہونا
11:موشن ۔ڈاٸریا ۔پتلے پاخانے انا
12:روزنہ تین چار بار یا اس سے زیادہ پاخانہ انا
13: بھوک نہ لگنا یا کم بھوک لگنا
14:بدبودار اور مختلف رنگوں میں پاخانہ انا
15:کچھ ٹھوس اور کچھ نرم پاخانہ انا
16:جل کر پاخانہ ھونا اور پاخانے میں بلغم کا ہونا
17:ایسا محسوس کرنا جیسے آنتوں کی حرکت نے آنتوں کو مکمل طور پر خالی نہیں کیا ، مطلب ، ٹوائلٹ کی حاجت ٹوائلٹ سے فارغ ہونے کے بعد بھی رہنا۔
18:بار بار آنتوں کو خالی کرنے کی فوری ضرورت کا سامنا کرنا ۔
19:وزن کا کم ہونا خصوصاً زیادہ موشن کی وجہ سے ،
20: مزید آئی بی ایس کے مریضوں میں ڈیپریشن انزائٹی کی علامتیں بھی ہو سکتی ہے ۔ جیسا کہ نیند کا مسلئہ ، ڈر خوف اور گھبراہٹ کا ہونا ، موت کا ڈر لگنا،کسی کام کو کرنے کا دل نہ کرنا، ہر ٹائم کمزوری تھکاوٹ محسوس کرنا۔ منفی سوچ اور خودکشی کے خیالات کا آنا، نفسیاتی مردانہ کمزوری کا ہونا ، چڑچڑاپن وغیرہ وغیرہ

۔IBS کی تشخیص ؟
آئی بی ایس کی تشخیص کے لیے کوئی عام سپیشل ٹیسٹ نہیں ہوتا , لیکن پھر بھی کچھ ضروری ٹیسٹ کیے جاتے ہیں۔ تا کہ مریض کو کوئی اور بیماری یا مسلئہ تو نہیں
کیونکہ یہی آئی بی ایس کی علامتیں اور بھی بہت سی بیماریوں میں ہو سکتی ہیں۔ ڈاکٹر /اطباء عموماً آئی بی ایس کی کلینیکل تشخیص کرتے ہیں۔
باقی آٸی بی ایس ایک سینڈروم ہے جو لمبے عرصے تک رہتا ہےاور اسکی تشخیص کے بعد مریض کو ہر اس چیز سے مکمل پرہیز کرنی چاہیے
جس سے IBS کی علامتوں میں اضافہ ہوتا ہے۔ خصوصاً دودھ سے بنی ہوئی ہر چیز سے، چائے،کافی سے ،تمام بوتلوں سے، میٹھی اشیاء سے
کھٹی اور زیادہ مرچ مسالے والی چیزوں سے پرہیز کرنی چاہیے،اور مزید سٹرس،تنائو کو بھی کم کرنا چاہیے ۔ آئی بی ایس کے کافی مریض تو بس پرہیز سے نارمل زندگی گزار سکتے ہیں
📌📌📌📌📌📌📌📌📌📌
یاد رکھیں اس میں مستقل پرہیز کرنی ہوتی ہے، اور آپ پراپر کسی Dietitian یعنی ماہر غذائیت سے بھی مدد لے سکتے ہیں،
جس مریض کو آئی بی ایس کا زیادہ مسلئہ ہو تو پھر اس کو پراپر میڈیکل علاج کےلئے ڈاکٹر/طبیب سے رجوع کرنا چاہیےاور میڈیسن باقاعدگی سے استعمال کرنا چاہیے۔
باقی یاد رکھیں
اگر پرہیز نہیں کرو گے تو پھر میڈیسن لینے سے بھی زیادہ فائدا نہیں ہونا۔لہذا پرہیز لازمی کریں, شکریہ



07/03/2024
چوائس آرکیٹیکچراس کی ایک عام مثال یہ ہے کہ جب آپ خریداری کر کے دوکاندار کو پیسے دے رہے ہوتے ہیںاوراس کے پاس چاکلیٹ کی بج...
06/03/2024

چوائس آرکیٹیکچر

اس کی ایک عام مثال یہ ہے کہ جب آپ خریداری کر کے دوکاندار کو پیسے دے رہے ہوتے ہیں
اور
اس کے پاس چاکلیٹ کی بجائے کوئی تازہ پھل پڑا ہوتا ہے تو اس کا نتیجہ یہ نکلتا ہے کہ آپ زیادہ صحت افزا چیزیں کھانا شروع کر دیتے ہیں

03/03/2024

قد بڑھانے کے لیے صحت مند خوراک کا اہتمام بہت اہم ہے۔ یہاں کچھ خوراک کی مصنوعات ہیں جو قد بڑھانے کے لئے مددگار ہوتی ہیں:

1. پروٹین بھرپور خوراک:
مثال کے طور پر دالیں، میٹھی، مچھلی، انڈے، اور دودھ وغیرہ پروٹین کی بھرپور مقدار میں پائی جاتی ہیں جو قد بڑھانے کے لئے مفید ہوتی ہیں۔

2. کیلشیم وردیتا مند خوراک:
دودھ، پنیر، چیز، مکھن، گوشت، اور سبزیاں کیلشیم کی بھرپور مقدار میں پائی جاتی ہیں جو ہڈیوں کو مضبوط کرتی ہیں اور قد بڑھانے میں مددگار ہوتی ہیں۔

3. وٹامن D:
دودھ، مچھلی، انڈے، اور کیلے وغیرہ وٹامن D کی بھرپور مقدار میں پائی جاتی ہیں جو قد بڑھانے میں مددگار ہوتی ہیں۔

4. فولاد وردیتا مند خوراک: گوشت، مچھلی، دالیں، اور سبزیاں فولاد کی بھرپور مقدار میں پائی جاتی ہیں جو ہڈیوں کو مضبوط کرتی ہیں اور قد بڑھانے میں مددگار ہوتی ہیں۔

یہ تمام خوراکیں آپ کے قد بڑھانے میں مددگار ہوسکتی ہیں، لیکن یہ ضروری ہے کہ آپ کسی ماہر نمکین یا چارٹرڈ پروفیشنل کی رہنمائی لیں تاکہ آپ کے لیے موزوں خوراک کا انتخاب کیا جا سکے

01/03/2024

💢بادام بھگو کر کھانا صحت کے لیے کس حد تک فائدہ مند؟
🌱🌱🌱🌱🌱🌱🌱🌱🌱🌱
⭕ اگر بے وقت بھوک لگے تو چپس یا بسکٹ کی بجائے موٹھی بھر بادام کھالیں
یہ وہ مثالی گری ہے جسے دن بھر کھایا جاسکتا ہے جس سے نہ صرف جسمانی توانائی میں اضافہ ہوتا ہے بلکہ متعدد طبی مسائل کا خطرہ بھی کم ہوتا ہے
بادام وٹامن ای، غذائی فائبر، میگنیشم، کاپر، زنک، آئرن، پوٹاشیم اور کیلشیئم سمیت 15 غذائی اجزا جسم کو فراہم کرتے ہیں
مگر آپ نے دیکھا ہوگا کہ اکثر افراد باداموں کو پانی میں بھگو کر کھانے کے عادی ہوتے ہیں
تو کیا یہ طریقہ کار اس میوے کو زیادہ صحت مند بنادیتا ہے؟
تو اس کا جواب ہے کہ بادام کو جیسے بھی کھایا جائے صحت کے لیے فائدہ مند ہے مگر پانی میں بھگو کر استعمال کرنا انہیں زیادہ صحت بخش بنادیتا ہے
🔬🔬🔬🔬🔬🔬🔬🔬🔬🔬
ماہرین کے مطابق بادام کو رات بھر پانی میں بھگو کر رکھنے سے اس سے کوٹنگ کی شکل جمع ہوجانے والا زہریلا مواد نکل جاتا ہے جبکہ گلیوٹین ڈی کمپوز ہوکر phytic ایسڈ کا اخراج ہوجاتا ہے جو اس گری کے فوائد بڑھاتا ہے۔
یہاں اس طریقہ کار کے فوائد درج ذیل ہیں۔

نظام ہاضمہ بہتر ہوتا ہے
♻️♻️♻️♻️♻️♻️♻️♻️♻️♻️
باداموں کو بھگو کر کھانا غذا کے ہضم ہونے کے عمل کو زیادہ ہموار اور تیز کردیتا ہے، جب پانی میں بادام کو بھگویا جاتا ہے اس میں ایک مخصوص انزائے کی تہہ بن جاتی ہے جو اسے آسانی سے ہضم ہونے میں مدد دینے کے ساتھ مکمل غذائیت جسم کو فراہم کرتی ہے، اس کے علاوہ ایسے باداموں سے شحم چربی گھلانے والے انزائمے کے اخراج میں بھی مدد دیتے ہیں جو نظام ہاضمے میں بھی مدد دیتا ہے۔

دماغی افعال میں بہتری
🧠🧠🧠🧠🧠🧠🧠🧠🧠🧠
سائنسدانوں نے ثابت کیا ہے کہ روزانہ 4 سے 6 بادام بھگو کر کھانا دماغی ٹونک کا کام کرتا ہے اور دماغی افعال کو بہتر کرتا ہے۔

یاداشت کے لیے بھی فائدہ مند
🤖🤖🤖🤖🤖🤖🤖🤖🤖🤖
حافظے کو تیز کرنے کے لیے بہت زیادہ بادام کھانے کی ضرورت نہیں، بس 8 سے 10 باداموں کو رات کو پانی میں بھگو کر صبح کھانا ہی موثر ثابت ہوتا ہے۔ ماہرین کے مطابق پانی میں بھگو کر بادام کھانا غذائی اجزا کو جسم میں آسانی سے جذب ہونے میں مدد دیتا ہے۔ اس کے علاوہ اس میں موجود وٹامن بی سکس پروٹینز کے میٹابولزم میں مدد دیتا ہے، جس سے دماغی خلیات میں آنے والی خرابیوں کی مرمت میں مدد ملتی ہے۔
🧬🧬🧬🧬🧬🧬🧬🧬🧬🧬
کولیسٹرول لیول کم کرے

پانی میں بادام کو بھگونے سے بلڈکولیسٹرول کی سطح میں کمی لانے میں بھی مدد دیتا ہے، اس گری میں موجود مونوسچورٹیڈ فیٹی ایسڈز دوران خون میں موجود نقصان دہ کولیسٹرول کی سطح کم کرتا ہے، اس کے علاوہ بادام میں موجود وٹامن ای بھی کولیسٹرول لیول کے خلاف مزاحمت میں مدد دیتا ہے۔

دل کی صحت بہتر کرے
🫀🫀🫀🫀🫀🫀🫀🫀🫀🫀
کولیسٹرول لیول کو کنٹرول میں رکھنے سے دل کی صحت میں بھی بہتری آتی ہے، اس میں موجود پروٹین، پوٹاشیم اور میگنیشم خون کی شریانوں کے نظام کو صحت مند رکھنے کے لیے ضروری ہیں، اس کے علاوہ بھی وٹامن ای ایسا اینٹی آکسائیڈنٹ وٹامن ہے جو امراض قلب کا خطرہ کم ہوتا ہے۔

بلڈ پریشر کی سطح میں کمی
🧰🧰🧰🧰🧰🧰🧰🧰🧰🧰
بادام میں سوڈیم کی مقدار بہت کم جبکہ پوٹاشیم کافی زیادہ ہوتا ہے جو بلڈ پریشر کو بڑھنے سے روکتا ہے، اس کے علاوہ میگنیشم اور فولک ایسڈ بھی اس خطرے کو کم کرنے والے اجزا ہیں۔

ذیابیطس کے مریضوں کے لیے بہترین
🥞🧇🍖🍗🥩🍞🥨🥫🍨🍰
باداموں کو بھگو کر کھانا ذیابیطس کو کنٹرول مین رکھنے میں مدد دینے والا قدرتی ٹوٹکا ہے، اس سے بلڈ شوگر لیول کنٹرول میں رہتا ہے جس سے اس مرض سے بچنا بھی ممکن ہوتا ہے۔

جسمانی وزن کم کرنے کے لیے معاون
🫄🧌🫄🧌🫄🧌🫄🧌🫄🧌
اگر جسمانی وزن میں کمی کے خواہشمند ہیں تو بادام کو روزانہ کی غذا کا حصہ بنانے پر غور کریں، بادام کو بھگو کر کھانا جسمانی وزن میں کمی کے عمل کو تیز کرتا ہے، اس میں موجود مونوسچورٹیڈ فیٹ بے وقت بھوک کی خواہش پر قابو پانے میں مدد دیتے ہیں۔

قبض کا علاج
👻👻👻👻👻👻👻👻👻👻
دائمی قبض کے شکار افراد بھی بادام کھانے کے اس طریقہ کار سے فائدہ حاصل کرسکتے ہیں، جس کی وجہ اس گری میں فائبر کی موجودگی ہے جو آنتوں کے افعال کو ٹھیک کرکے قبض کو دور کرتی ہے

01/03/2024

28/02/2024

تھوڑا نہیں پورا سوچئیے

27/02/2024

ایسٹرن میڈیسن پر انٹرنیشنل سیمینار کا اہتمام،
رجسٹرار منہاج یونیورسٹی ڈاکٹر خرم شہزاد ،
ڈین فیکلٹی ڈاکٹر فاروق لطیف اور ہیڈ آف ڈیپارٹمنٹ ڈاکٹر صالحہ حمید
مشرف علی زیدی کو سووینئر پیش کرتے ہوئے




27/02/2024

ایسٹرن میڈیسن پر انٹرنیشنل سیمینار کا اہتمام،
رجسٹرار منہاج یونیورسٹی ڈاکٹر خرم شہزاد ،
ڈین فیکلٹی ڈاکٹر فاروق لطیف اور ہیڈ آف ڈیپارٹمنٹ ڈاکٹر صالحہ حمید،
ڈاکٹر ادریس احمد خان کو سووینئر پیش کرتے ہوئے




27/02/2024


#پانی
#محفوظ
#صحت
#پاکستان

26/02/2024

کلونجی(Nigella sativa) میں کثیر مقدار وٹامنز،منرلز اور انٹی آکسیڈنٹ خصوصیات پائی جاتی ہیں

26/02/2024

کلونجی(Nigella sativa)
ضدِفِطَر
Anti fungal
خصوصیات کے حامل بیج

26/02/2024

کلونجی (Nigella sativa)
"اینٹی بیکٹیریل"
دافع کِرم
خصوصیات کےحامل بیج

Address

Lahore Road Muhammad Ali Chock Raiwind
Raiwind

Opening Hours

09:00 - 17:00

Telephone

+923314971092

Website

Alerts

Be the first to know and let us send you an email when Hk Bashir Institute Of Herbal Sciences posts news and promotions. Your email address will not be used for any other purpose, and you can unsubscribe at any time.

Videos

Share


Other Alternative & Holistic Health in Raiwind

Show All