Dr Ayesha Tariq

Dr Ayesha Tariq One of best child speclist in the city..

پیلا یرقان/ ہیپاٹائٹس اے ۔۔۔آج کل پیلا یرقان بہت تیزی سے پھیل رہا ھےجس کی سب سے بڑی وجہ گندا پانی اور بازار کی کھانے وال...
19/10/2023

پیلا یرقان/ ہیپاٹائٹس اے ۔۔۔
آج کل پیلا یرقان بہت تیزی سے پھیل رہا ھےجس کی سب سے بڑی وجہ گندا پانی اور بازار کی کھانے والی اشیاء کا زیادہ استعمال ھے
پیلے یرقان کے جراثیم، صفائی کا خیال نہ رکھنے کے باعث متاثرہ شخص سے دوسرے لوگوں میں منتقل ھو جاتے ھیں ۔۔ بازار کی اشیاء بناتے وقت صفائی کا خیال نہیں رکھا جاتا ۔۔
پیلے یرقان کے جراثیم معدہ ،انت کی سوزش کے ساتھ ساتھ جگر کو متاثر کرتا ھے۔۔
بچے پیلی رنگت، پیٹ درد، الٹی، چکر، سر درد، بخار اور پیشاب کے مسائل کے ساتھ آتے ھیں
ایسے میں
صفائی کا خاص خیال رکھیں
ھاتھ دھو کر کھانا بنائیں اور کھانا کھانے سے پہلے ھاتھ دھوئیں
بچوں کو بازار کی اشیاء بلکل نہ دیں ۔
تلی ھوئی ، تیز مصالحے دار اشیاء نہ دیں
بازار کے گنے کے رس سے پرہیز کریں
گھر میں پھلوں کے جوس بنا کر دیں
سادہ کھانا کھلائیں
صفائی کا خاص خیال رکھیں
گھر کے باقی افراد ہیپاٹائٹس اے کی ویکسین لگوایں

19/10/2023

کئی بار والدین پوچھتے ہیں کہ ڈاکٹر صاحب ہمارے بچے کا سر اور ماتھا گرم ہے جبکہ ہاتھ پاؤں ٹھنڈے ہیں، تھرمامیٹر بھی جسم کا نارمل درجہ حرارت بتا رہا ہے۔ تو یہ کیا ہے؟؟

میں اس پوسٹ میں اس چیز کی وضاحت کروں گا۔

بچوں کا دماغ بہت تیزی سے بڑھ رہا ہوتا ہے۔ پیدائش کے وقت سر کا سائز اوسطاً پینتیس سینٹی میٹر ہوتا ہے جو ایک سال میں بڑھ کر سینتالیس اور دو سال کی عمر میں انچاس سینٹی میٹر تک ہو جاتا ہے۔ اسکے بعد پھر زندگی میں صرف پانچ سینٹی میٹر تک مزید بڑھتا ہے لہذا ابتدائی تین سے پانچ سالوں میں سر اور دماغ کی تیزی سے نشوونما ہوتی ہے۔ تیز نشونما کا مطلب ہے تیز میٹابولزم میں اور میٹابولزم میں اضافہ کا مطلب ہے اس درجہ حرارت میں اضافہ ہے۔

جسم کا مرکز دل ہے اور مرکز میں زیادہ حرارت ہوتی ہے جبکہ سر کے مقابلے ہاتھ اور پاٶں دل سے زیادہ دور ہوتے ہیں۔ لہٰذا جب خون دل سے چلتا ہے تو اس سے حرارت مختلف طریقہ کار کے زریعے کم ہو جاتی ہے جیسے پسینا، انسنانی جسم کو چھونے والی چیزیں اور جسم کے ارد گرد کا درجہ حرارت ,ہوا ۔
سر چونکہ دل کے قریب ہے بہ نسبت ہاتھ اور پاٶں کو تو خون کی گرماٸش سر کی طرف ہاتھ پاٶں کے مقابلہ میں زیادہ ہوتی ہے ۔

اھم یہ ہے کہ اگر آپکو لگتا ہے بچہ گرم ہے تو اسکا تھرمامیٹر سے ٹمپریچر چیک کریں۔اگر یہ 99 سے کم ہےتو تسلی رکھیں۔
دوسروں کے والدین کے ساتھ بھی شیئر کریں۔ جزاک اللہ

02/10/2023

بچوں میں ناف کا ہرنیا اور والدین کے لیے ہدایات !!!!
ناف کا ہرنیا بچوں میں بہت عام حالت ہے۔
اسکی علامات میں ناف کی سوجن یا پھول جانا شامل ہے جو روتے ہوئے زیادہ نمایاں ہو جاتی ہے اور اسے آسانی سے دبایا جا سکتا ہے۔یہ عمومأ پیداٸیش پر ہی ظاہر ہوجاتا ہے ۔
اس کی کوئی خاص وجہ نہیں ہے لیکن کچھ کیسز جیسے ہائپوتھائیرائڈزم اس سے منسلک ہو سکتے ہیں۔
والدین کو ذہن میں رکھنے کی چند ضروری باتیں !!! یہ ایک بہت عام حالت ہے یہ عمومأ بےضرر ہوتا ہے عام طور پر اسکے لیے کوئی علاج یا سرجری کی ضرورت نہیں ہوتی ہے عام طور پر یہ خود ہی تین سے چار سال کی عمر میں ٹھیک ہوجاتا ہے۔ اس سے بچے کو کوئی تکلیف یا درد نہیں ہوتا یہ بچے قے یا الٹی کا سبب نہیں بنتا یہ بچوں میں وزن یا قد نہ بڑھنے کی وجہ یہ نہیں ہے کبھی بھی اسکو سکے کے ذریعے لپیٹنا یا دباؤ نہ ڈالیں اس سے اسکے ارد گرد جلد گل سکتی ہے اور انفیکشن کا باعث بن سکتا ہے جو زیادہ خطرناک ہو سکتا ہے۔

18/09/2023
18/09/2023

دورے یا جھٹکے پڑنا بچوں میں ایک بہت عام مسئلہ ہے۔
میں آپ سب سے خاص طور پر والدین کے ساتھ ایک بہت اہم نکتہ پر بات کرنا چاہتا ہوں۔
اگر ڈاکٹر خود سے جھٹکوں کو نہیں دیکھ پاتا تو مرگی یا دوروں کی تشخیص کرنا بہت مشکل کام ہے ۔ کوئی ایک ایسا ٹیسٹ نہیں ہے جو سو فیصد یہ بتا سکے کہ مریض کو دورے یا جھٹکے پڑ تےہیں۔مریض کے والدین اکثر اوقات جس کو دورہ سمجھ رہیے ہوتے ہیں وہ حقیقت میں دورہ نہیں ہوتا ۔
ای ای جی ایک ٹیسٹ ہے جو ھم عمومأ کرواتے ہیں لیکن یہ جب مریض کو مرگی کا مرض ہو پھر بھی نارمل سکتا ہے۔
سب سے اھم چیز دوروں یا جھٹکوں کی تفصیل کے بارے میں جاننا بہت ضروری ہے۔
آجکل کے دور میں تمام لوگوں کے پاس کیمرے والے موبائل ہوتے ہیں لہذا جب بھی خدانخواستہ کسےی بچے کو جٹھکے لگیں تو بچے کو سنبھالنے کے ساتھ ساتھ ایک بندہ اسے فون میں ریکارڈ کرلے۔
تشخیص کے لیے یہ ویڈیو بہت ضروری ہے تاکہ درست دوائیں شروع کی جاٸیں کیونکہ مختلف ادویات مختلف قسم کے دوروں کے لیے کام کرتی ہیں۔
اگر آپ کے بچے کو مرگی نہیں ہے اور صرف آپکے دیکھنے پر اسکا مرگی والاعلاج شروع کر دیا جاۓ تو اس کے بہت دیرپا اثرات ہوتے ہیں۔بچے مرگی کی دوا باقاعدگی سے دینا، دوائی کا بندوبست کرنا، دوا کے مضر اثرات، مرگی ہونے کا معاشرتی اثر,والدین میں فکر ,بچے کی روٹین کا متاثر ہونا وغیرہ شامل ہیں جسکا آپکو سامنا کرنا پڑے گا۔
اس لیے اسکی درست تشخیص بہت ضروری ہے اور اس میں آپ کی ویڈیو ریکارڈنگ ھماری مدد کر سکتی ہے۔

عام طور پر ھم سے  یہ سوال پوچھا جاتا ہے کہ آپ ڈاکٹر اکثر اس بات پر زور دیتے ہیں کہ  نو مو لود اور ایک سال سے چھوٹےبچے کو...
16/09/2023

عام طور پر ھم سے یہ سوال پوچھا جاتا ہے کہ آپ ڈاکٹر اکثر اس بات پر زور دیتے ہیں کہ نو مو لود اور ایک سال سے چھوٹےبچے کو گا ئے کا دودھ بالکل نہ دیں , لیکن کبھی اسکی سائنسی وضا حت نہیں دی ۔ہمارے محلے میں تو سب لوگ بچوں کو گا ئے,بھینس ,یا بکری کا دودھ پلالتے ہیں ۔
جواب !!! سب سے پہلی بات یہ کہ گا ئےکا دودھ قدرت نے گا ئے کے بچھڑ ے کے لئے بنا یا ہے ۔ بچھڑے کی غذا کی ضرو ریات انسان کے بچے سےبا لکل مختلف ہیں ۔ گا ئے کے بچھڑے کا معدہ اور نظام ہضم انسان کے نا زک بے بی سے بالکل مختلف ہے ۔ جس طر ح ایک با لغ انسان گا ئے کی غذا ہضم نہں کر سکتا اسی طر ح بے بی کا معدہ بھی بچھڑ ے کا خوراک ہضم نہیں کر سکتا ۔اس لئے ما ں کا دودھ ایک نو مو لود بچےکے لئے بہتر ین غذا ہے ۔اگر ما ں کا دودھ کسی وجہ سے میسرنہیں ہے تو دوسرے نمبر پر فا رمو لا یا ڈبے کا دودھ ہے ۔اگر چہ ڈبے کا دودھ گا ئے کے دودھ سے ہی بنا یا جاتا ہے مگر اس کو ایک بہت پیچیدا طر یقہ سےگزار کر ما ں کےدودھ کے سا خت کے قریب ترکیا جا تا ہے ۔ اس کے علا وہ مندرجہ ذیل سا ئنسی وجو ھا ت پر غور کر یں ۔ گا ئے کے دودھ میں ائرن بہت کم مقدار میں ہے اور جس شکل میں ہےا میں بہت کم مقدار میں جذب ہو تا ہے۔ گا ئے کے دودھ میں پروٹین اورمنرل کی مقدر بہت زیا دہ ہے جوکہ نو مو لود بے بی کے گردوں کو نقصان پہنچا سکتا ہے ۔ اور گائےکےدودوھ میں جو لیپڈ کی مختلف شکل مو جود ہے ۔وہ انسا نی بے کے لئے مو زوں نہیں ۔اور ایک انتہا ئی ہم چیز گائے کادودھ بہت ابتدائی عمر میں دینے سے کا و ملک الرجی ک رسک بہت بڑھ جا تا ہے جس سے جس سے بے بی کے انت سے خون بہتا ہےجو بظا ہر پا خانے میں نظر نہیں آ تا مگر اگر ما ئیکرو سکوپ کے اندر دیکھےں تو یہ اوکلٹ بلڈ کی صورت میں نظر آتا ہے ۔ اس سے نہ صرف انت کو نقصآن ہو تا ہےبلکہ خون میں مو جو د رہا سہا ائرن بھی پا خا نے کے راستے ضا ئع ہو جا تا ہے ایرن کی کمی کے با رے میں میں تفصیلی پو سٹ لکھ چکا ہو ں ۔ اگر گا ئے کا دودھ پینے والا بچہ بظا ہر صحت مند نظر آ ئے تو اس ک یہ مطب یہ نہیں کہ اس کی ذہنی اور جسما نی صحت بہتر ہے ۔ ہمیں نہیں معلوم ا س میں ائرن کی کمی ہے ۔ور ائرن ذہنی صحت اور ائی کیو کے لئے ضروری ہے ۔اور ای طرح ہی بھی اندازہ لگا نا اسان نہیں کہ بچے کے گر دوں پر کتنا بو جھ ہے -ایک اور چیز کی وضا حت ضروری ہے ۔ کیو نک بچھڑے کےلئے جسا مت کا جلد بڑھنا زیا دہ ضروری ہے ۔اس لئے قدرت نے گا ئے کے دودھ میں پر و ٹیں ا ور منرل کی مقدار انسانی حد سے زیا دہ رکھا ہے ۔انسان کے لئے پہلی تر جیح دما غ اور ذہنی صحت ہے اس لئے ماں کے دودھ میں سینکڑوں ایسے اجزا ہیں جو دماغ کے نشو نما میں مددکرتے ہیں۔۔ ایک سال کی عمر میں بچے کا ہا ضمہ اورگردے اتنے میچو ر ہو تے ہیں کہ بے بی ارام سے گا ئے کا دودھ ہضم کرسکتا ہے ۔ ۔ ہمار ا کام بچو ں کی صحت کے با رے میں جدید سا ئنسی معلوما ت فرا ہم کرناہےب۔ بچو ں کو جو بھی وا لدین پلا ئیں ان کی مر ضی ہے ۔ اللہ سب کو اپنے حفظ و امان میں رکھے ۔آ مین ۔مزید کو ئی شکوک وشبہا ت ہو ں تو سوال ضرور بھیجے ۔

21/08/2023

چند دن پہلے ایک بچے کو ایمرجینسی کےاندر واش روم کی صفائی کےلیےاستعمال ہونے والے تیزاب پینے کی وجہ سے داخل کیا گیا تھا۔ بچے کا منہ کافی زیادہ جل گیا تھا، منہ سے تھوک جاری تھا اور قے میں خون آرہا تھا۔
ایک ہی دن پہلے گھر میں نئے بچے کی پیدائش پر یہ خاندان بہت خوش تھا لیکن آج وہ اس دکھ سے گزر رہے تھے۔ مزید تفصیلات زیادہ تکلیف دینے والی تھیں۔ انہوں نے بتایا کہ انکے گھر کےواش روم میں پیپسی کی بوتل کےاندر واش روم صاف کرنے والا تیزاب رکھاہواتھا۔ بچوں نے اسے کولڈ ڈرنک سمجھا اور پینا شروع کر دیا۔ آدھے گھنٹے بعد وہ ایمرجنسی میں تھے۔
اس طرح کے کیسز کا علاج بہت پیچیدہ ہو جاتا ہے کیونکہ ہمارے کھانے کی نالی , جو منہ کو معدہ سے ملاتی ہے, اسکے زخم جب ٹھیک ہونا شروع ہوتے ہیں یہ خوراک کی نالی اس دوران سکڑ جاتی ہے اور تنگ ہوجاتی ہے۔ اس کے بعد اسے بارباراینڈو سکوپی سے کھولنا پڑتاہے ۔
تمام والدین کے لیے پیغام ہے کہ کبھی بھی کولڈ ڈرنک کی بوتلوں میں واش روم کلینر یا کوئی تیزاب,کیمیکل نہ ڈالیں۔ نقصان دہ چیزوں کو ہمیشہ بچوں کی پہنچ سے دور رکھیں۔
Dr Ayesha Tariq
Consultant child speclist
Mbbs
FCPS pediatrics medicine
PGPN Boston university america
RAMEEN Medical complex Dr somia serwar clinic housing colony 1 rajjana road toba tek Singh
0310 6265036

15/08/2023

آنکھ میں دواٸ کے کتنے قطرے ڈالے جاٸیں !!!
انسانی آنکھ سات مائیکرو لیٹرز کی مقدار میں کوٸ بھی ماٸع (Liquid) رکھنے کی صلاحیت رکھتی ہے۔ اس سے زیادہ لیکوڈ یا سولیوشن ڈالا جاۓ تو آنکھ سے باہر نکل جائے گا۔
اب اگر ہم ایک آنکھ کے قطرے والی مختلف دوائیوں کے ایک قطرے کا حجم دیکھیں تو یہ پچیس سے پچاس مائیکرو لیٹر ہے جو کہ آنکھ کی جمع رکھنے کی صلاحیت سےپہلے ہی زیادہ ہے .
اس لیے اگر آپ کسی بھی قسم کے آئی ڈراپس استعمال کر رہے ہیں تو اس کی زیادہ سے زیادہ مقدار ایک وقت میں ایک قطرہ ہے , ہاں انکو ایک گھنٹے سے لے کر چھے گھنٹے تک دہرایا جاسکتاہے جو بیماری اور دواٸ کی نوعیت پر منحصر ہے۔
اگر آپ اپنی آنکھ میں ایک قطرہ زیادہ ڈال رہے ہیں تو آپ اپنی دوا ضائع کر رہے ہیں اور کچھ نہیں۔

11/08/2023

اگر آپکے گھر میں چھوٹے بچے ہیں تو اپنے گھر سے متعلق ان ہدایات پر عمل کریں:

تمام والدین کو آگاھ کریں۔یہ صدقہ جاریہ ہے ۔جزاك الله

1۔مٹی کا تیل ,واشروم کلینر , فصلوں کے سپرے ،کیمیکلز کو کھانے پینے ,پرانی کولڈ ڈرنکس کی بوتلوں یا برتنوں میں نہ رکھیں۔ کیوں کہ بچے کھانے والے برتن يا بوتل میں رکھی چیز کو چکھ کر دیکھتے ہیں۔
2۔تیز دھار آلات جیسے چھری، چاقو اور دیگر آلات جیسے پیچ کس بچے کی پہنچ سے دور رکھیں۔ ان سے کام کرتے وقت نظر رکھیں کہ بچہ محفوظ رہے۔
3۔کچن میں چائے ,ہانڈی سوپ بناتے ہوئے یا پانی گرم کرتے وقت دھیان رکھیں کہ چھوٹا بچہ چولہے کے قریب نہ آئے۔بچہ جل سکتا ہے۔
4۔ایسی مشینری جسکو تار لگی ہو، اُسکی تار نیچے نہ لٹکنے دیجیۓ۔ کیوں کہ بچے تار کھینچ کر مشین کو خود پر گرا سکتے ہیں۔
5۔بالٹی یا کسی بھی بڑے برتن میں پانی صرف اُس وقت ڈالیں جب ضرورت ہو۔ بالٹی پانی سے بھری ہو تو بچے پر نظر رکھیں کہ اسکے قریب نہ جائے۔ بچے بالٹی یا ٹب میں بھی ڈوب جاتے ہیں
6۔تمام ادویات، شیمپو، ماؤتھ واش بچوں کی پہنچ سے دور،کسی ایسی الماری میں رکھیں جسکو تالا لگایا جا سکتا ہو۔
7۔گھر میں مچھر کی گول coil ہرگز نہ جلائیں۔ اس کے شعلے سے آگ لگنے خطرہ ہوتا ہے۔لیکوڈ استعمال کریں
8۔کتابوں کی الماری اور ٹیلی ویژن کو پیچھے سے دیوار کے ساتھ جوڑ کر رکھیں۔ بچے ان پر اپنا وزن ڈال کر انکو اپنے اوپر گرا سکتے ہیں۔
9۔جب بچے زمین پر رینگنا یا چلنا شروع کر دیں تو سیڑھیوں پر گیٹ لگا کر بند کریں۔ایسے بچے جو چل سکتے ہیں وہ ہر وقت کسی بڑے کی نگاہ میں ہونے چاہئیے۔
10۔بچے کو اٹھا کر سیڑھیاں اترتے وقت اپنا ایک ہاتھ ریلنگ پرضرور رکھیں ۔
11۔اگر آپکے گھر میں پالتو جانور ہے تو بچے کو اس کے پاس اکیلا مت چھوڑیں۔بچے کو نقصان پہنچا سکتا ہے
12۔گھر میں بڑے شاپنگ بیگ نہ رکھیے۔ یا بچوں کی پہنچ سے دور رکھیں۔بچے سر پر لپیٹ کر پھنس جاتے ہیں اور یہ دم گھٹنے کاباعث بن سکتا ہے
13۔ بچوں کو 4 سال تک مونگ پھلی يا اس جیسی دانے دار کھانے والی چیزیں ہرگز نہ دیں۔یہ سانس کی نالی میں جانے کا خطرہ ہے۔
14۔ ربڑ کا غبارا اگر پھٹ جائے تو بچے کو اس سے کھیلنے نہ دیجئے۔ یہ ربڑ بچے کے سانس کے عمل کو خراب کر سکتی ہے۔ اسی طرح ایسے کھلونے جو انتہائی چھوٹے ہوں یا جن میں چھوٹے سیل ہوں، بچوں کھیلنے کے لیے خرید کر نہ دیں۔

15۔گھر میں کام کرنے والے ملازم اور ملازمہ پر نظر رکھیں۔وہ بچے پر تشدد کر سکتے ہیں۔ خاص کر اس عمر میں کہ جب بچہ آپکو بول کر خود سے بتا نہیں سکتا۔

16۔ بجلی کے تمام پلگ یا سوٸچ جو بچے کی پہنچ میں ہوں، انکو موٹی ٹیپ کے ساتھ بند کر دیں یا کور کریں۔ تاکہ بچہ اس میں انگلی ڈال کر کرنٹ نہ لگوا لے۔
17-کار کی چابی سنبھال کر رکھیں۔بچے کار میں بیٹھ کر خود کو بند کر لیتے ہیں اور پھر دم گھٹنے یا گرمی سے نقصان پہنچ سکتا ہے۔

یاد رکھیے، آپکے چھوٹے بچے ہر وقت آپکی نظروں کے سامنے ہونے چاہیے ۔(copied)

22/07/2023

بچے کے سامنے اسکی بری باتوں کا اسکے والدین کو بتانا بچے پہ کیا گیا ایک نفسیاتی تشدد ہے اور اس دوران اگر والدین بچے کا ساتھ نا دیں تو وہ بچہ ساری عمر اپنے والدین کیساتھ اعتماد کا رشتہ نہیں بنا سکتا ہے۔

کبھی بھی کسی دوسرے شخص کو یہ حق مت دیں کہ وہ آپ کے بچے کی بری باتیں آپ کو بتانے کی کوشش کرے اور کسی کے سامنے چاہے بچہ غلط ہو اس کو ڈیفینڈ کریں ورنہ وہ اس وقت نفسیاتی طور پہ خود کو کسی جنگ میں قیدی کے طور پہ پکڑے گئے شخص سے بھی زیادہ برا محسوس کرے گا اور یہ احساس کمتری اس میں ہمیشہ رہے گا۔

عموماً ٹیچرز اس بات میں بہت فخر محسوس کرتے ہیں کہ وہ بچے کے والدین کو بچے کے سامنے اس کی ایک ایک منفی بات بتا رہے ہیں اور یہ بات وہ ایک اچیومنٹ کے طور پہ لیتے ہیں۔ اسی طرح والدین بچے کی منفی باتوں کو ٹیچر کیساتھ ڈسکس کرنا بہت اہم سمجھتے ہیں اور بچے کو سامنے بیٹھا کر اسکی سرزش کرتے ہیں۔

مگر،

ان کی یہ حرکت بچے کو نفسیاتی طور پہ توڑ کر رکھ دیتی ہے۔ انکے اس جبر کو بچہ ساری عمر نہیں بھلا پاتا ہے۔ اگر آپ ایک پیرینٹ ہیں تو اپنے بچے پہ ایسا جبر نا خود کریں نا کسی کو کرنے کی اجازت دیں چاہے وہ ٹیچر ہو یا کوئی رشتہ دار، آپ بچے کے لئے ایک جلاد نہیں سیف ہاؤس ہیں۔ وہ بنیں۔

پری اسکول اور اسکول جانے والے بچے جوؤں کے انفیکشن کا سب سے زیادہ شکار ہوتے ہیں۔  والدین کا فرض ہے کہ آپ کو اپنے بچے کے ب...
21/07/2023

پری اسکول اور اسکول جانے والے بچے جوؤں کے انفیکشن کا سب سے زیادہ شکار ہوتے ہیں۔ والدین کا فرض ہے کہ آپ کو اپنے بچے کے بالوں کی نشوونما کے ساتھ ساتھ اس میں اور کیا بڑھ رہا ہے اس پر بھی نظر رکھیں۔🐜

ہلکے یا شدید دونوں قسم کے انفیکشنز کے لیے بہت سے علاج دستیاب ہیں، جو آپ اس بلاگ میں پڑھ سکتے ہیں🤩

گیس یا کالک (Infantile Colics) کا درد بچوں میں بہت عام ہے اور یہ آپ کے بچے اور آپ کو تکلیف پہنچا سکتا ہے۔ گیس اکثر روتے ...
15/07/2023

گیس یا کالک (Infantile Colics) کا درد بچوں میں بہت عام ہے اور یہ آپ کے بچے اور آپ کو تکلیف پہنچا سکتا ہے۔ گیس اکثر روتے وقت یا کھانا کھلانے یا ہاضمے کے عمل سے ہوا نکلنے کی وجہ سے ہوتی ہے۔ اگرچہ گیس آپ کے بچے کے لیے درد کا باعث بن سکتی ہے، لیکن یہ عام طور پر بے ضرر ہے۔ گیس کے اخراج کو فروغ دے کر اور اس سے بچا کر، آپ اپنے بچے کی گیس کو دور کرنے میں مدد کر سکتے ہیں۔

گیس کی علامات میں شامل ہیں: ٹانگیں اوپر کھینچنا۔
مٹھیوں کو بند کرنا۔
ادھر ادھر گھومنا گویا وہ بے چین ہے۔
بہت رونا۔
ڈکار لینا۔
ہوا کا خارج ہونا۔
چہرے کا سرخ ہو جانا۔
اگر آپ کو بچے کو سہلانے اور آرام کرانے سے اس کی گیس دور کرنے میں مدد نہیں ملتی ہے، تو اپنے ڈاکٹر سے مشورہ کریں۔ وہ ان بیماریوں یا آنتوں کے مسائل کی تشخیص کر سکتا ہے جو مستقل گیس کا سبب بن سکتے ہیں۔

22/01/2023

بچوں میں ذیابیطس کی دوسری وجہ۔۔۔۔

غذا کے استعمال میں بے احتیاطی ہے۔ ہم جس دور میں ہیں وہاں اب زندگی اتنی تیز ہوچکی ہے کہ اس میں جنک فوڈ کا استعمال اب عام ہے۔ ایسا کھانا جسے ہم 'انرجی ڈینس فوڈ' کہتے ہیں وہ ہر وقت دستیاب ہے۔ جب آپ بچے کو ایسے کھانوں سے متعارف کروادیتے ہیں تو اس کی چاہت کم نہیں بلکہ بڑھتی جاتی ہے۔
Dr ayesha tariq
Consultant child speclist
MBBS FCPS paeds medicne
PGPN Boston University America
CIGSKM Canada
Rameen medical complex dr Somia serwer clinic housing colony 1 opposite to kathcri toba tek singh
03106265036 fr appointment

Nahyeat khoubsoorat tehreer..Dr ayesha tariqConsultant child speclistMBBS FCPS paeds medicnePGPN Boston University Ameri...
22/01/2023

Nahyeat khoubsoorat tehreer..
Dr ayesha tariq
Consultant child speclist
MBBS FCPS paeds medicne
PGPN Boston University America
CIGSKM Canada
Rameen medical complex dr Somia serwer clinic housing colony 1 opposite to kathcri toba tek singh
03106265036 fr appointment

22/01/2023

دمہ/Asthma

ڈاکٹر صاحب اس کو ہر وقت کھانسی آتی رہتی ہے رات کو نہ خود سوتا ہے اورنہ ہمیں سونے دیتا ہے

کھانسی اتنی زیادہ ہوتی ہے کہ کئی بار تو قے کر دیتا ہے جب بھی موسم بدلتا ہے یہ اس طرح بیمار ہوجاتا ہے ہر طرح کے کھانسی کے سیرپ لا کر دیکھ لیا ہے یہ ٹھیک نہیں ہوتا۔
ماں کی بات سن کر جب ڈاکٹر نے بچے کی طرف دیکھا تو بچہ ایک بے بسی کی تصویر بنا ہوا تھا سانس تو مشکل سے لے رہا تھا مگرکھانسی کرتے ہوئے ڈرتا تھا کہ ماں سے ڈانٹ پڑے جائے گی۔
ڈاکٹر نے معائنہ کیا تو بتایا کہ آپ کے بچے کو دمہ ہے یہ سنتے ہی ماں غصے اور خوف میں آکر جذبات سے بولی ڈاکٹر صاحب دمہ تو اس کے دادا ابو کو ہے۔ وہ ہر وقت کھانسی کرتے ہیں بہت زیادہ بلغم نکالتے ہیں ہیں ان کو تو سگریٹ کی وجہ سے ہوا تھا اس بچے کو کیسے ہو سکتا ہے۔
ڈاکٹر نے ماں کو تسلی دی کہ اصل میں پھیپھڑوں کی الرجی ہوتی ہے ہے جس سے سانس کی نالیاں تنگ ہو جاتی ہیں اور یہ یہ اچھوت کی بیماری نہیں کہ ایک سے دوسرے کو لگ جائے بلکہ یہ ایک مورثی بیماری ہے۔
اس کا علاج مشکل نہیں ایک انہیلر تجویز کر رہا ہوں اس کو spacer device کی مدد سے استعمال کریں اور انشاء اللہ آپ کے بچے کی تکلیف میں فوری افاقہ ہوگا ماں نے ڈاکٹر کی بات پر مکمل عمل کیا اور پندرہ دن بعد جب دوبارہ دکھانے آئے تو بہت خوش تھی کہ بچہ بہت بہتر ہو گیا ہے اب سکون ہے پڑھائی میں بھی بہتر ہیں اور کھیل کود میں بھی دشواری نہیں۔
یہی تشخیص اگر پانچ سال پہلے ہو جائے تو ہر بچے کے پانچ سال تکلیف میں نہ گزرے۔
Dr ayesha tariq
Consultant child speclist
MBBS FCPS paeds medicne
PGPN Boston University America
CIGSKM Canada
Timing 3.30 to 6 sham peer ta hafta
03106265036 fr appointment

21/01/2023

دس سے بارہ ماہ کی عمر میں بچے میں خودمختاری کی صلاحیت پیدا ہونا شروع ھوتی ھے اگر اس عمر میں بچے کا وزن اس کی عمر کے لحاظ سے نہیں بڑھ رہا اور بچہ کھانے پینے میں تنگ کررہا ہے تو اس کا مطلب والدین چیزوں کو ذیادہ کنٹرول کرنے کی کوشش کررہے ہیں ۔۔۔ بچے کی خودمختاری کا خیال رکھیں ۔۔
اس مشکل کا آسان ترین حل یہ ہے کہ (two spoon feeding method) یعنی دو چمچ 🥄 طریقہ استعمال کریں ۔۔ ایک چمچ بچے کو پکڑایں اور ایک سے آپ اسے کھانا کھلائیں ۔۔ خود کھانا کھاتے وقت بچوں کی ہائی چیر (کرسی) جس کے آگے ٹرے لگی ہوتی اس پر بچے کو اپنے ساتھ بیٹھایں ۔۔ بچے کو finger food لمبائی میں کٹ کیے ھوے پھل اور سبزیاں متعارف کروائیں
اگر آپ بچے کی خودمختاری کا خیال نہیں رکھیں گے تو بچے میں چڑچڑا پن پیدا ہونے کا خطرہ ہوتا جسے temper tantrums کہتے ہیں
Dr ayesha tariq
Consultant child speclist
MBBS FCPS paeds medicne
PGPN Boston University America
CIGSKM Canada
Rameen medical complex dr Somia serwer clinic housing colony 1 opposite to kathcri toba tek singh
03106265036 fr appointment

18/01/2023

بچوں میں خون کی کمی کا ہونا ہمارے معاشرے میں عام بیماری ہے۔اس کی وجہ سے بچے تھکاوٹ ذیادہ محسوس کرتے ہیں، رنگت پیلی ہو جاتی ہے، ٹانگوں میں درد رہتا ہے اور پڑھائی میں کمزور ہو جاتے ہیں۔
خون کی کمی کئی بیماریوں کی علامت کے طور پر ظاہر ہوتی ہے۔
Dr ayesha tariq
Consultant child speclist
MBBS FCPS paeds medicne
PGPN Boston University America
CIGSKM Canada
Rameen medical complex dr Somia serwer clinic housing colony 1 opposite to kathcri toba tek singh
03106265036 fr appointment
Timing 3.30 to 6 sham peer ta hafta

کم وبیش 12- 10سال کی طِب کی پڑھائی کے بعد ایک ڈاکٹر نسخہ لِکھنے قابل ہوتا ہے، اپنی مرضی سے ادویات استعمال مت کریں۔Dr aye...
15/01/2023

کم وبیش 12- 10سال کی طِب کی پڑھائی کے بعد ایک ڈاکٹر نسخہ لِکھنے قابل ہوتا ہے،
اپنی مرضی سے ادویات استعمال مت کریں۔
Dr ayesha tariq
Consultant child speclist
MBBS FCPS paeds medicne
PGPN Boston University America
CIGSKM Canada
Rameen medical complex dr Somia serwer clinic housing colony 1 opposite to kathcri toba tek singh
Timing 3.30 to 6 sham peer ta hafta
03106265036 fr appointment

Diptheria aik khatarnaak maraz ha Lakin barwawat tashkhees se Zindagi ka bachao mumkin ha..Apny bcho ko aise alamaat ki ...
14/01/2023

Diptheria aik khatarnaak maraz ha Lakin barwawat tashkhees se Zindagi ka bachao mumkin ha..
Apny bcho ko aise alamaat ki soorat me forun doctor ke pass le ke jyein
Dr ayesha tariq
Consultant child speclist
MBBS FCPS paeds medicne
PGPN Boston University America
CIGSKM Canada
Rameen medical complex dr Somia serwer clinic housing colony 1 opposite to kathcri toba tek singh
Timing 3.30 to 6 sham peer ta hafta
03106265036 fr appointment

Pnemonia se bachhao ke liye in ahteati tadabeer pe amal kryeinDr ayesha tariqConsultant child speclistMBBS FCPS paeds me...
13/01/2023

Pnemonia se bachhao ke liye in ahteati tadabeer pe amal kryein
Dr ayesha tariq
Consultant child speclist
MBBS FCPS paeds medicne
PGPN Boston University America
CIGSKM Canada
Rameen medical complex dr Somia serwer clinic housing colony 1 opposite to kathcri toba tek singh
03106265036 fr appointment
Timing 3.30 to 6 sham peer ta hafta

⭕⭕⭕منہ میں زخم یا چھالے۔۔۔⛔السرگول یا بیضوی شکل کے چھالے یا زخم ہیں۔ یہ جسم میں کہیں بھی بن سکتے ہیں تاہم منہ کے السرعمو...
12/01/2023

⭕⭕⭕
منہ میں زخم یا چھالے۔۔۔

⛔السرگول یا بیضوی شکل کے چھالے یا زخم ہیں۔ یہ جسم میں کہیں بھی بن سکتے ہیں تاہم منہ کے السرعموماً ہونٹ، زبان، اندرونی گال اورتالو وغیرہ پرہی بنتے ہیں۔

ان کی موجودگی تکلیف دہ ہونے کے ساتھ ساتھ کھانے پینے اوربولنے میں بھی مشکل کا باعث بنتی ہے۔

زیادہ ترافراد میں ان کا دورانیہ ایک سے دو ہفتوں تک ہوتا ہے۔ اس عرصے میں یہ بغیرکسی علاج کے ہی ٹھیک ہوجاتے ہیں۔

❤️❤️عام وجوہات...

🛑مرچ اورگرم مسالوں کا بے جا استعمال معدے میں تیزابیت کا باعث بنتا ہے۔ زیادہ ترصورتوں میں یہی تیزابیت منہ میں چھالوں کا سبب بنتی ہے۔ منہ کے السرکی اصل وجہ کا تعین تو مشکل ہے تاہم ان عوامل کو اس سے وابستہ خیال کیا جاتا ہے.

💊٭وٹامن بی 12، آئرن، فولک ایسڈ کی کمی ہونا۔

♈٭منہ اوردانتوں کی مکمل اورباقاعدہ صفائی نہ ہونا۔

⭕٭رگڑ رگڑ کربرش کرنا یا سخت اورناقص برش کا استعمال کرنا۔ یہ دانتوں کی ساخت متاثرکرتا ہے بلکہ اس کے باقاعدہ استعمال سے مسوڑے بھی زخمی ہوجاتے ہیں۔

🛑٭عموماً جلدی جلدی کھانے یا ویسے ہی کھیل کود کے دوران گال کے اندرونی حصے کا دانتوں کے درمیان آجانا۔

🔵٭مخصوص ادویات کا استعمال کرنا۔

٭🔵کیفین مثلاً چائے‘ کافی‘ بلیک چاکلیٹ کا زیادہ استعمال ۔

♐٭ ہارمونزکا غیرمتوازن ہونا ۔

🎇٭ذہنی تناؤ،اضطراب اورڈپریشن کا شکار ہونا۔

🔆٭منہ میں بیکٹیریا‘ وائرس اورانفیکشنزہونا۔

🛑٭کچھ بیماریوں مثلاً ذیابیطس، سی لئک ،آئی بی ڈی اورخون کی رگوں میں سوجن کا شکارہونا۔٭قوت مدافعت کمزور ہونا ۔

🔵٭ ڈینٹل بریسز کے استعمال کی وجہ سے کھانے پینے یا بولنے کے دوران مسوڑھوں پررگڑ لگ جانا۔

🛑🛑🛑علاج

السرکے علاج میں پہلی ترجیح درد کی شدت میں کمی لانا ہوتا ہے۔ اس کے لئے کھانے اورزخموں پرلگانے کے لئے ادویات دی جاتی ہیں۔ یہ صحت یابی کے عمل میں تیزی اوردرد میں کمی لاتی ہیں۔

⚠️منہ کی صحت کوبرقرار رکھنے کے لئے روزانہ رات کوسونے سے پہلے یا کھانے کے بعد ایک گلاس نیم گرم پانی میں نمک ڈال کرغرارے کریں یا ڈاکٹرکا تجویز کردہ ماؤتھ واش استعمال کریں۔ السر کی وجہ معدے کی خرابی ہوتواس کے لئے ادویات دی جاتی ہیں۔

🟥مزیدبرآں غذائی کمی کو پورا کرنے کے لئے مختلف سپلی منٹس بھی ڈاکٹر کے مشورے سے کھائے جاسکتے ہیں۔
Dr ayesha tariq
Dr Somia serwer clinic housing colony 1 opposite to kathcri toba tek singh

11/01/2023

پاکستان🇵🇰 میں ہر سال فلو کے کیسز میں اضافہ دیکھنے میں آتا ہے، خاص طور پر سردیوں 🥶🌨️کے موسم میں اور اس میں بھی خاص طور پر دسمبر کے مہینوں میں درجہ حرارت میں کمی کے ساتھ۔

فلو وائرس 🦠آسانی سے ایک شخص سے دوسرے شخص میں پھیلتا ہے جیسےکھانسنے🤧
چھینکنے اور متاثرہ جگہوں کو چھونے سے منتقل ہوتا ہے .

بچے 👦خاص طور پر فلو اور موسمی زکام سے متاثر ہوتے ہیں۔

میں ان آسان مشوروں پر بات کروں گا جن پر عمل کرکے آپ اپنے اپنے آپ کو اور اپنے بچوںکو موسمی زکام اور فلو🦠سے سے بچا سکتے ہیں۔

🌈قریبی رابطے سے گریز کریں

🌠بیمار لوگوں کے ساتھ قریبی رابطے سے گریز کریں۔ جب آپ بیمار ہوں تو دوسروں سے فاصلہ رکھیں تاکہ وہ بھی بیمار ہونے سے بچ سکیں!!!

1-🌈جب آپ بیمار ہوں تو گھر پر رہیں

🌠اگر ممکن ہو تو، جب آپ بیمار ہوں تو سے گھر پر رہیں۔ اس سے آپ کی بیماری کو دوسروں تک پھیلانے سے روکنے میں مدد ملے گی۔

2-🌈اپنے منہ اور ناک کو ڈھانپیں۔

🌠کھانستے یا چھینکتے وقت اپنے منہ اور ناک کو ٹشو سے ڈھانپیں۔ یہ آپ کے آس پاس کے لوگوں کو بیمار ہونے سے روک سکتا ہے۔ فلو کے وائرس بنیادی طور پر ان بوندوں سے پھیلتے ہیں جب فلو والے لوگ کھانسی، چھینک یا بات کرتے ہیں۔

3-🌈اپنے ہاتھ صاف کریں۔

🌠اپنے ہاتھ بار بار دھونے سے آپ کو جراثیم سے بچانے میں مدد ملے گی۔ اگر صابن اور پانی دستیاب نہیں ہیں تو الکحل پر مبنی ہینڈ سیناٹایزر کا استعمال کریں۔

4-🌈اپنی آنکھوں، ناک یا منہ کو چھونے سے گریز کریں۔

🌠جراثیم اس وقت پھیل سکتے ہیں جب کوئی شخص جراثیم سے آلودہ چیز کو چھوتا ہے اور پھر اس کی آنکھوں، ناک یا منہ کو چھوتا ہے۔

5-🌈دیگر اچھی صحت کی عادات پر عمل کریں۔

☄️گھر، کام یا اسکول میں اکثر چھونے والی سطحوں کو صاف اور جراثیم سے پاک کریں، خاص طور پر جب کوئی بیمار ہو۔

☄️ بھرپور نیند حاصل کریں
☄️جسمانی طور پر متحرک رہیں
☄️ اپنے تناؤ کو کم کریں
☄️مناسب مقدار میں پانی پیئیں
☄️غذائیت سے بھرپور کھانا کھائیں۔
Dr ayesha tariq
Rameen medical complex dr Somia serwer clinic housing colony 1 opposite to kathcri toba tek singh
Timing 3.30 to 6 sham peer ta hafta
03106265036 fr appointment
Is post ko public awareness ke lye like or share kryein

11/01/2023

ایک سال کی عمر تک بچے کو شہد نہ دیں

اس کے دینے سے بچے کے پٹھوں میں (botulism ) کمزوری , قبض اور سانس کے مسلے آ سکتے ہیں ۔
Dr ayesha tariq
Consultant child speclist
MBBS FCPS paeds medicne
PGPN Boston University America
CIGSKM Canada
Rameen medical complex dr Somia serwer clinic housing colony 1 opposite to kathcri toba tek singh
03106265036 fr appointment
Timing 3.30 to 6 sham peer ta hafta

نمونیہ کا علاج فوری کیجئےبچوں میں بخار کے ساتھ  تیزسانس چلنے کی صورت میں علاج کے لیے ڈاکٹر /کارکنان صحت سے فوری رابطہ کر...
11/01/2023

نمونیہ کا علاج فوری کیجئے
بچوں میں بخار کے ساتھ تیزسانس چلنے کی صورت میں علاج کے لیے ڈاکٹر /کارکنان صحت سے فوری رابطہ کریں

Dr ayesha tariq
Consultant child speclist
MBBS FCPS paeds medicne
PGPN Boston University America
CIGSKM Canada
Rameen medical complex dr Somia serwer clinic housing colony 1 opposite to kathcri toba tek singh
03106265036 fr appointment
Timing 3.30 to 6 sham peer ta hafta

11/01/2023

🌀انجیکشن 💉لگواتے وقت احتیاط سے کام لیں !!!

🌀آج ہسپتال🏥 کو ایک بیمار آیا تو ہاتھ باندھا ہوا تھا ، پوچھنے پر معلوم ہوا کہ کسی نرس نے کپڑے کے اوپر سے انجیکشن💉 لگایا تھا ، انجیکشن کیساتھ کپڑے 🧵کا چھوٹا سا دھاگہ اندر گیا تھا ، جو زخم بن گیا ، پھر ہر وقت درد اور پیپ بالآخر ہاتھ کاٹنے تک بات آ گئ ___

🌀لہذا کوشش کریں کہ
انجیکشن💉 ماہر نرس/ڈاکٹر👨‍⚕️ سے لگوائیں اور بازو میں لگوائیں تو بازو 💪کو ننگا کرکے صحیح جگہ پر لگاۓ اور ظاہر ہے اج پیشن کی وجہ سے سستی کی وجہ سے جلدی میں کپڑے کی اوپر انجکشن لگائ جاتی ہے جو تھوڑی سی بےاحتیاطی وبال جان بن جاتی ہے .

🌀افسوس سے احتیاط بہتر ہے
Dr ayesha tariq
Consultant child speclist
MBBS FCPS paeds medicne
PGPN Boston University America
CIGSKM Canada
Rameen medical complex dr Somia serwer clinic housing colony 1 opposite to kathcri toba tek singh
03106265036 fr appointment
Timing 3.30 to 6 sham peer ta hafta
Hmre post ko like ar share kryein

10/01/2023

بچے اور دودھ پلانے کے دوران پیٹ کی گیس!!!!

جب آپ کا بچہ تیزی سے دودھ پی رہا ہو تو اسے ڈکار دلوانے کی کوشش نہ کریں۔
یہ ان کو پریشان کرنے، انہیں رونے، اور انہیں مزید ہوا نگلنے کا سبب بن سکتا ہے۔
ایک وقت منتخب کریں جب وہ دودھ پیتے ہوےدھیمے ہو جائیں یا دودھ پینے کے درمیا وقفہ لے رہے ہوں۔

ڈکار دلوانے کے لیے وہ پوزیشن کا استعمال کریں جس کے ساتھ وہ سب سے زیادہ آرام دہ دکھائی دیتے ہیں۔

تین بنیادی پوزیشنیں ہیں جن میں اپنے بچے کی کمر کو آہستہ سے تھپتھپائیں اور رگڑیں:

1---اپنے کندھے پر

2---اپنی گود میں بیٹھنا، باہر کا سامنا کرنا یا ایک طرف

3---آپ کی گود میں منہ لیٹا
Dr ayesha tariq
Consultant child speclist
MBBS FCPS paeds medicne
PGPN Boston University America
CIGSKM Canada
Rameen medical complex dr Somia serwer clinic housing colony 1 opposite to kathcri toba tek singh
03106265036 fr appointment
Timing 3.30 to 6 sham peer ta hafta

10/01/2023

اپنے دوستوں کو بھی اس پیج پر مدعو کریں اور ہمارا مواد شیئر کرتے رہیں، ہمارا مقصد بچوں کی صحت کے مسائل سے آگاہی ہے، یہ صدقہ جاریہ ہے ❤️ جزاک اللہ
Dr ayesha tariq
Consultant child speclist
MBBS FCPS paeds medicne
PGPN Boston University America
CIGSKM Canada
Rameen medical complex dr Somia serwer clinic housing colony 1 opposite to kathcri toba tek singh
Timing 3.30 to 6 sham peer ta hafta
03106265036 fr appointment

09/01/2023

جو بچے پہلے 6 ماہ میں ماں کے دودھ سے محروم رہتے ہیں، ان میں الٹیاں اور دست کا امکان 178% , چھاتی کے انفکشن کا امکان 257%, دمے کا امکان 50 %, کان کے انفکشن کا امکان 100%, شوگر(type 2) کا امکان 64% , خون کے کینسر(ALL) کا امکان 23% ان بچوں سے زیادہ ہوتا ھے جو پہلے 6 ماہ صرف ماں کا دودھ پیتے ہیں۔
Dr ayesha tariq
Consultant child speclist
MBBS FCPS paeds medicne
PGPN Boston University America
CIGSKM Canada
Rameen medical complex dr Somia serwer clinic housing colony 1 opposite to kathcri toba tek singh
Timing 3.30 to 6 sham peer ta hafta
03106265036 fr appointment

06/01/2023

ماں کا دودھ بچوں کے لیے پہلے 6 ماہ کے لیے خصوصی طور پر اور دوسرے ٹھوس کھانوں کے ساتھ دوسری سالگرہ تک بہترین غذائیت ہے۔

اگر کسی وجہ سے ماں کا دودھ دستیاب نہ ہو تو پہلے سال فارمولا دودھ دیا جا سکتا ہے۔

پہلی سالگرہ کے بعد، فارمولا دودھ کی ضرورت نہیں ہے اور تازہ جانوروں کا دودھ (گائے یا بھینس) 24 گھنٹوں میں زیادہ سے زیادہ 500 ملی لیٹر (16-17 اونس) تک دیا جا سکتا ہے۔

البتہ: پہلے سال کسی جانور کو دودھ نہ دیں۔

کبھی بھی گائے کے دودھ کو پانی میں نہ ملائیں کیونکہ یہ کیلوریز اور دیگر غذائی اجزاء کو نمایاں طور پر کم کرتا ہے۔

منسلک تصویر سے پتہ چلتا ہے کہ اگر گائے کے دودھ کو 1:1 میں پانی میں ملایا جائے، تو اس میں بڑھتے ہوئے شیر خوار بچوں اور نوزائیدہ بچوں کے لیے انتہائی ناقص غذائیت ہوتی ہے جو فولاد کی شدید کمی انیمیا، خراب نشوونما اور نشوونما کا باعث بنتی ہے۔

مختصراً، ماں کا دودھ بچوں کے لیے بہترین دودھ ہے۔

اگر آپ کے کوئی سوالات ہیں، تو براہ کرم تبصرے میں پوچھیں۔
Dr ayesha tariq
Timing 3.30 to 6 sham peer ta hafta
03106265036 fr appointment
Rameen medical complex dr Somia serwer clinic housing colony 1 opposite to kathcri toba tek singh

Dr AYESHA TARIQCONSULTANT CHILD SPECLISTMBBS FCPS PAEDS MEDICNEPGPN BOSTON UNIVERSITY AMERICACIGSKM CANADARAMEEN MEDICAL...
06/01/2023

Dr AYESHA TARIQ
CONSULTANT CHILD SPECLIST
MBBS FCPS PAEDS MEDICNE
PGPN BOSTON UNIVERSITY AMERICA
CIGSKM CANADA
RAMEEN MEDICAL COMPLEX DR SOMIA SERWER CLINIC HOUSING COLONY 1 OPPOSITE TO KATHCRI TOBA TEK SINGH
TIMING 3.30 TO 6 SHAM PEER TA HAFTA
03106265036 FR APPOINTMENT

06/01/2023

نو مو لو د بچے میں بیماری کے علاما ت ۔ سستی یا غنو دگی ۔ نو مو لود بچو ں میں سستی یا غنو دگی بیما ری کی پہلی نشا نی ہے ۔ عام طور پر نو مو لود بچے ابتدائی ایا م میں مجمو عی طور دن میں بیس سے با ئیس گھنٹے تک سوتے ہیں جو وقت کے ساتھ ساتھ کم ہو تا رہتا ہے اورتین مہنے کی عمر چودہ سےاٹھارہ گھنٹے تک گھٹ جا تا ہے ۔ مگر ایک صحت مند بچہ ابتدا میں ہر تین سے چار گھنٹے اور اس کے بعد دو سے تین مہینے کی عمر میں چار سے چھ گھنٹے میں دودھ پینے کے لئے جا گ جا تا ہے ۔ اور پوری طاقت سے دودھ پیتا ہے ۔ ہا تھ پیر پوری طا قت سے اچھی طرح ہلاتا ہے اور رونے میں بھی پو را زور لگا تا ہے ۔اگر بچہ دودھ پینے کے لئے نہ جا گے اور جگا نے پر بھی دودھ پینے میں دلچسپی ظا ہر نہ کر ے اسی طرح سست نظر ائے یا ہا تھ پیر نہ ہلا ئے اور پوری طاقت سے نہ روئے تو یہ تشویش نا ک ہے ۔ اس صورت میں فورا اپنے ڈا کٹر سے مشو رہ کر یں ۔ بخار تین مہہنے سے کم عمر کے بچو ں میں جسم کے درجہ حرارت کو کنٹرول کرنے ولا نظام پوری طر ح فعال نہیں ہوتا ۔ لہذا انفیکشن کی صورت میں صرف بیس فی صد بچو ں میں بخار آتا ہے ۔ یعنی اگر بچے کو بخار نہیں تو اس کا مطب ہر گز یہ نہیں کہ بچہ بیما ر نہہیں ۔ بعض نو مو لود بچو ں میں انفکشن کے نتیجے میں جسم کا درجہ حرارت نا رمل سے کم ہو جاتا ہے ۔ اس صو رت حال کو Hypothermia یا Temperature instability کہتے ہیں- اگر نو مولود بچے کا ٹمپریچر 38 ڈگری سینٹی گریڈ یا 100.4 یا اس سے زیادہ ہو تو یہ انتہا ئی تشو ی ناک بات ہے اس صورت میں بڑے بچے کی طرح پیرا سیٹا مول پلا کر انتظار با لکل نہ کر یں بلکہ فورا اپنے ڈاکٹر سے را بطہ کر یں تا کہ ڈاکٹر مناسب فیصلہ کر ے کہ بخار کی وجہ کیا ہے ۔ بعض اوقات نو مو لود بچو ں میں پا نی کی کمی یا ڈیہا ئیڈریشن Dehydration کی وجہ سے بھی بخار آجا تا ہے ۔لیکن یہ فیصلہ ڈاکٹر کو کر نے دیں
Dr ayesha tariq

Maa ka dodh bachy ke liye behtreen gizza ha.Dr ayesha tariqConsultant child speclistMBBS FCPS paeds medicnePGPN Boston U...
04/01/2023

Maa ka dodh bachy ke liye behtreen gizza ha.
Dr ayesha tariq
Consultant child speclist
MBBS FCPS paeds medicne
PGPN Boston University America
CIGSKM Canada
Rameen medical complex dr Somia serwer clinic housing colony 1 opposite to kathcri toba tek singh
Timing 3.30 to 6 sham peer ta hafta
03106265036 fr appointment

Dr ayesha tariqConsultant child speclistMBBS FCPS paeds medicnePGPN Boston University AmericaCIGSKM CanadaRameen medical...
04/01/2023

Dr ayesha tariq
Consultant child speclist
MBBS FCPS paeds medicne
PGPN Boston University America
CIGSKM Canada
Rameen medical complex dr Somia serwer clinic housing colony 1 opposite to kathcri toba tek singh
Timing 3.30 to 6 sham peer ta hafta
03106265036 fr appointment

30/12/2022

#بچوں کے لئے #صحتمند #نیند کے #بنیادی #اصول
1. اپنے بچے کے لئے #سونے کے #وقت کا #معمول بنائیں۔
2. #سونے اور #جاگنے کا #وقت #اسکول کی #راتوں اور #اتوار کی #رات میں #ایک ہی #وقت کا ہونا چاہئے۔ #ایک دن سے #دوسرے دن میں تقریبا #ایک #گھنٹے سے زیادہ کا #فرق #نہیں ہونا چاہئے۔
3. سونے سے #پہلے بچوں کے ساتھ ایک گھنٹہ #مشترکہ ماحول میں گزارے۔ سونے سے پہلے #تھکا دینے والی سرگرمیوں سے گریز کرے ، جیسے کسی نہ کسی طرح #کھیل اور #محرک سرگرمیاں #جیسے #ٹیلی ویژن دیکھنا یا #کمپیوٹر گیمز کھیلنا چھوڑیں۔
4. اپنے بچے کو #بھوکے بستر پر نہ بھیجیں۔ سونے سے پہلے #ہلکا ناشتہ (جیسے دودھ اور کوکیز) اچھی #عادت ہے۔ سوتے وقت ایک گھنٹہ یا 2 گھنٹے کے اندر #بھاری #کھانا ، نیند میں #مداخلت کرسکتا ہے۔
5. سونے سے قبل کم از کم کئی گھنٹوں تک #کیفین پر مشتمل #مصنوعات سے پرہیز کریں۔ ان میں #کیفینڈ #سوڈا ، #کافی ، #چائے ، اور #چاکلیٹ شامل ہیں۔
6. اس بات کو #یقینی بنائیں کہ آپ کا بچہ ہر دن ، جب بھی ممکن ہو ، باہر وقت گزارتا ہے ، اور #باقاعدگی سے #ورزش میں شامل ہوتا ہے۔
7. اپنے بچے کے #بیڈروم کو #خاموش اور #تاریک رکھیں۔ ایک کم سطح کی رات کی روشنی ان بچوں کے لئے قابل قبول ہے جو مکمل طور پر اندھیرے والے کمرے میں ڈرتے ہیں۔ رات کے وقت بچے کے #بیڈروم کی #درجہ #حرارت 24 ڈگری سے کم رکھے۔
9. اپنے بچے کے #سونے کے #کمرے کو #سزا کے لئے استعمال نہ کریں۔
10. #ٹیلیویژن کو اپنے #بچے کے #کمرے سے #دور رکھیں۔ بچے آسانی سے ٹیلیویژن کو سو جانے کی "ضرورت" ایک #بری عادت بناسکتے ہیں۔ اگر TV بیڈروم میں ہے تو اپنے بچے کے دیکھنے پر قابو پانا بھی زیادہ مشکل ہے۔
Dr ayesha tariq
Consultant child speclist
MBBS FCPS paeds medicne
PGPN Boston University America
CIGSKM Canada
Rameen medical complex dr Somia serwer clinic housing colony 1 opposite to district Court rajana road toba tek singh
03106265036 fr appointment
Timing 3.30 to 6 sham peer ta hafta

Address

Rameen Medical Complex Housing Colony 1 Opposite To Katcheri Toba Tek Singh
Toba Tek Singh

Opening Hours

Monday 17:00 - 18:29
Tuesday 17:00 - 18:29
Wednesday 17:00 - 18:30
Thursday 17:00 - 18:30
Friday 17:00 - 18:29
Saturday 17:00 - 18:30

Telephone

+923106265036

Alerts

Be the first to know and let us send you an email when Dr Ayesha Tariq posts news and promotions. Your email address will not be used for any other purpose, and you can unsubscribe at any time.

Contact The Business

Send a message to Dr Ayesha Tariq:

Share

Category


Other Toba Tek Singh clinics

Show All

Comments

ڈاکٹر صاحبہ اللہ پاک آپ کو لمبی زندگی دے
اور آپ کے ہاتھ میں اور شفا دے آپ نے میرے
بھائیوں کا علاج کیا تھا اب وہ ما شاءاللہ 11 ماہ کے ہو گیے ہیں